آسٹریلیا سے باہر

جو بھی غیرقانونی طورپر کشتی کے ذریعے آسٹریلیا پہنچنے کی کوشش کریگا اسے یا تو واپس کردیا جا ئیگا یا اسکے اپنے ملک بھیج دیا جائیگا ۔

آسٹریلیا کی سرحدیں ان سب کے لئے بند ہیں جوغیرقانونی طور پرآسٹریلیا پہنچنے کی کوشش کریں گے اور یہ بند ہی رہیں گی ۔

غیرقانونی طریقے سے آسٹریلیا پہنچنے کی کوشش کرنے والوں کو کوئی مالی مفاد حاصل نہیں ہوگا ۔

انسانی اسمگلروں کے جھوٹ سے بےوقوف نہ بنیں وہ صرف آپکا پیسہ لوٹنا چاہتے ہیں ۔

غیرقانونی طور پرکشتی سے آسٹریلیا پہنچنے کی کوشش بے سود اور انتہائی خطر ناک ہے ۔

آپریشن ساورن بارڈرز

آسٹریلین حکومت سرحدی حفاظت کے سخت اقدامات پر عملدرآمد جاری رکھے ہوۓ ہے تاکہ سمندر میں جانوں کے ضیاع کی روک تھام کی جاۓ اور انسانی سمگلنگ کرنے والے نیٹ ورکس کی بیخ کنی کی جاۓ۔

This poster represents the 'you will be turned back' policy. The poster directs the reader to www.australia.gov.au/novisa

آپریشن ساورن بارڈرز (OSB) کے تحت غیر قانونی طور پر کشتی کے ذریعے آسٹریلیا آنے کی کوشش کرنے والے ہر شخص کو واپس اس ملک کو بھیج دیا جاۓ گا جہاں سے وہ روانہ ہوا تھا۔

آسٹریلیا میں کارروائی اور آبادکاری کا موقع کسی ایسے شخص کو کبھی حاصل نہیں ہو گا جو غیر قانونی طور پر کشتی سے سفر کرتا ہے۔

آسٹریلیا اپنی سرحدوں کی حفاظت کرنے اور انسانی سمگلنگ کے مجرمانہ دھندے کا خاتمہ کرنے کے عہد پر قائم ہے۔

آسٹریلین حکومت اپنے ملک سے باہر ان لوگوں کیلئے کئی ابلاغی سرگرمیاں انجام دے رہی ہے جو غیر قانونی طور پر کشتی سے آسٹریلیا آنے پر غور کر رہے ہیں تاکہ وہ آگاہ ہو جائیں کہ وہ کبھی آسٹریلیا کو اپنا وطن نہیں بنا پائیں گے۔

میڈیا رلیز : مضبوط اور مستحکم سرحدوں کے 1000 دن

انسانی سمگلنگ کرنے والوں کے جھوٹ کا اعتبار نہ کریں

انسانی سمگلنگ کرنے والے آپ کو بتائیں گے کہ وقت کے ساتھ ساتھ آسٹریلیا اپنی پالیسی نرم کر دے گا۔ آسٹریلین حکومت نے اپنا سخت مؤقف نہ بدلا ہے اور نہ بدلے گی۔

غیر قانونی طور پر کشتی سے آسٹریلیا آنے کی کوشش کرنے والے کسی شخص کو آسٹریلیا میں آباد نہیں کیا جاۓ گا۔

یہ اصول سب کیلئے ہیں: خاندان، بچے، تنہا نابالغ افراد، تعلیم یافتہ اور ہنرمند افراد – کوئی استثناء نہیں پایا جاتا۔

اپنے پیسے ضائع نہ کریں۔ انسانی سمگلنگ کرنے والوں کے جھوٹ کا اعتبار نہ کریں۔

انڈونیشیا میں UNHCR کے ساتھ رجسٹر کرنا

آسٹریلین حکومت نے انڈونیشیا سے آنے والے پناہ گزینوں کی آبادکاری کے سلسلے میں اپنے اصول بدل لیے ہیں۔

اگر آپ انڈونیشیا کا سفر کرتے ہیں اور یکم جولائی 2014 کو یا اس کے بعد انڈونیشیا میں UNHCR کے ساتھ رجسٹر کرتے ہیں تو آپ پر آسٹریلیا میں آبادکار ی کیلئے غور نہیں کیا جاۓ گا۔

یکم جولائی 2014 سے پہلے انڈونیشیا میںUNHCR کے ساتھ رجسٹر کرنے والے لوگوں میں سے بھی آسٹریلیا کی جانب سے آبادکاری کیلئے لیے جانے والوں کی تعداد کم کر دی گئی ہے۔

یہ اصول سب کیلئے ہیں۔ کوئی استثناء نہیں پایا جاتا۔

معلوماتی پرچہ

مزید معلومات

آسٹریلیا کے پناہ گزینوں اور انسانی ہمدردی کے پروگرام کے بارے میں معلومات کیلئے Refugee and Humanitarian دیکھیں۔

پناہ گزینوں کیلئے اور انسانی ہمدردی کے تحت ویزوں میں حالیہ تبدیلیوں کیلئے Refugee and Humanitarian visas دیکھیں۔

Department of Immigration and Border Protection کے نیوزروم میں جا کر پناہ گزینوں، آسٹریلیا سے باہر کارروائی، آبادکاری کے انتظامات اور آسٹریلیا کے پناہ گزینوں اور انسانی ہمدردی کے پروگرام کے بارے میں مزید معلومات تک رسائی حاصل کریں۔